بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

17 ذو الحجة 1441ھ- 08 اگست 2020 ء

دارالافتاء

 

جاندار کے نقش والی انگوٹھی کے ساتھ نماز


سوال

 اگر انگوٹھی پر جاندار کا نقش ہو ایسی انگوٹھی کے ساتھ نماز ہو جاتی  ہے یا نہیں؟

جواب

اگر انگوٹھی پر بنی تصویر ایسی ہے کہ انگوٹھی زمین پر رکھی ہونے کی صورت میں کھڑے ہوئے آدمی کو اس تصویر کے اعضاء واضح نظر آرہے ہوں تو ایسی صورت میں ایسی انگوٹھی پہن کر نماز پڑھنا مکروہ ہے، تاہم نماز ادا ہوجائے گی، اور اگر اتنے فاصلے سے وہ تصویر واضح نظر نہ آئے  تو ایسی صورت میں نماز بلاکراہت ادا ہوجائےگی۔

الدر المختار وحاشية ابن عابدين (رد المحتار) (1 / 648):
(أو كانت صغيرة) لا تتبين تفاصيل أعضائها للناظر قائما وهي على الأرض، ذكره الحلبي". فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144104201067

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں