بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

3 ربیع الاول 1442ھ- 21 اکتوبر 2020 ء

دارالافتاء

 

روزے میں بام لگانا اور بھاپ لینا


سوال

1۔ روزے کی حالت میں بام سونگھنے کا کیا حکم ہے؟

2۔ روزے کی حالت میں صرف گرم پانی سےبغیرکچھ ملائے بھاپ ( اسٹیم) لینے کا کیا حکم ہے؟

جواب

روزے کی  حالت میں  ناک سے باہر تو بام/وکس لگانے میں کوئی مضائقہ نہیں ہے، البتہ ناک کے اندر وکس وغیرہ لگانے سے چوں کہ سانس کے ساتھ اس کے اجزاء وذرات اندر چلے جاتے ہیں، اس لیے  روزہ کی حالت میں ناک کے اندر وکس لگانا درست نہیں ہے، اگر نا ک کے اندر وکس لگائی اور اس کے ذرات سانس کے ساتھ دماغ تک پہنچ گئے تو روزہ فاسد ہوجائے گا۔

روزے کی حالت میں  بھاپ لینے سے  اگر بخارات حلق تک پہنچ گئے توروزہ فاسد ہوجائے گا ۔فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 143909200264

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں