بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

11 شعبان 1441ھ- 05 اپریل 2020 ء

دارالافتاء

 

ایزی پیسہ اور موبی کیش کا حکم


سوال

1۔ ٹیلی نار سم کا ایزی پیسہ موبائل اکاؤنٹ یا جیز سم کا موبی کیش موبائل اکاؤنٹ کھلوانا کیسا ہے ؟

2۔  موبائل اکاؤنٹ میں پیسے رکھنے پر جو منٹ،ایم بی اور ایس ایم ایس ملتے ہیں؟ ان کا استعمال جائز ہے یا نہیں؟ سود ہے یا نہیں؟ راہ نمائی فرمائیں۔

جواب

1۔ اگرایزی پیسہ اور موبی کیش سے مقصود فقط رقم کی منتقلی ہوتواس حد تک اس اکاؤنٹ کااستعمال درست ہے،رقم منتقلی کی صورت میں اگر کمپنی صارف سے کچھ رقم (بطور سروس چارجز) وصول کرتی ہے تو یہ بھی درست ہے۔

2۔  موبائل اکاؤنٹ میں رکھی گئی  رقم قرض ہے، اور اس پر ملنے والے اضافی فوائد(منٹ،انٹرنیٹ،میسج) سود ہیں؛ اس لیے مذکورہ اکاؤنٹ میں رکھی رقم پر ملنے والے منافع حاصل کرنا جائز نہیں ہوگا۔فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 143812200007

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاشں

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے یہاں کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے

سوال پوچھیں

ہماری ایپلی کیشن ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے