بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

- 14 نومبر 2019 ء

دارالافتاء

 

عید الاضحیٰ کے دنوں میں روزے کا حکم


سوال

گیارہ ،بارہ ذوالحجہ کو روزے رکھنا جائز ہے؟

جواب

شرعی طور پر پانچ دن روزے رکھنا ممنوع ہے: عیدالفطر(یکم شوال)، عیدالاضحیٰ کے تین دن اور اس کے بعد ایک دن یعنی 10 ذوالحجہ سے 13 ذو الحجہ تک۔ ان ایام میں روزے کی نیت کرنا جائز نہیں ہے،اور اگر کوئی روزہ رکھ لے تو اسے توڑنا لازم ہے۔

فتاوی شامی میں ہے :

"( قوله: والمكروه) بالنصب عطفاً على السنة، أو بالرفع على الابتداء، وخبره قوله: كالعيدين، وحينئذ لايحتاج إلى التكلف المار في وجه إدخاله في النفل على أن صوم العيدين مكروه تحريماً، ولو كان الصوم واجباً، (قوله: كالعيدين ) أي وأيام التشريق ، نهر". (2/375)

فتاوی عالمگیری میں ہے :

"ويكره صوم يوم العيدين، وأيام التشريق ... ولا قضاءَ عليه إن شرع فيها ثم أفطر، كذا في الكنز، هذا في ظاهر الرواية عن الثلاثة". (5/226) فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144012200447

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاشں

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے یہاں کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے

سوال پوچھیں

ہماری ایپلی کیشن ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے