بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

10 شوال 1441ھ- 02 جون 2020 ء

دارالافتاء

 

کرسی کے آگے لگے لکڑی کے تختے پر سجدہ کرنا


سوال

جو لوگ کرسی پر نماز پڑھتے ہیں،  کیا وہ کرسی کے آگے لگے لکڑی کے تختے پر سجدہ کر سکتے ہیں؟

جواب

جو شخص کسی عذرِ شرعی کی وجہ سے کرسی پر بیٹھ کر نماز پڑھے  تو اس کے لیے رکوع اور سجدہ کا اشارہ کافی ہے، تخت پر سجدہ کرنا لازم نہیں ہے، تاہم اگر تخت پر سجدہ کرلے تب بھی سجدہ ادا ہوجائے گا، بشرط یہ کہ سامنے کے میز اونچائی میں کرسی کے برابر ہو اگر کرسی سے اونچی ہو تو ایک یا دو اینٹ سے زیادہ اونچی نہ ہو ۔ حاشية رد المحتار على الدر المختار (2/ 99):
’’إنكان الموضوع مما يصح السجود عليه كحجر مثلاً، ولم يزد ارتفاعه على قدر لبنة أو لبنتين فهو سجود حقيقي، فيكون راكعاً ساجداً لا مومئاً حتى أنه يصح اقتداء القائم به‘‘.
فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144001200498

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاش

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں

ہماری ایپلی کیشن ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے