بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

7 ربیع الثانی 1441ھ- 05 دسمبر 2019 ء

دارالافتاء

 

لپ اسٹک لگے ہونے کی صورت میں وضو کا حکم


سوال

 اگر لپ اسٹک لگی ہوئی ہو تو کیا وضو ہو جاتا ہے؟

جواب

اگر لپ اسٹک ایسی ہے جو   پانی کے  جلد تک پہنچنےمیں  رکاوٹ  بنتی ہے تو اس کے ہوتے ہوئے وضو نہیں ہوگا۔  اور اگر لپ اسٹک ایسی نہیں، بلکہ اس کے نیچے جلد تک پانی پہنچ سکتا ہے تو اس کے ہوتے ہوئے وضو ہوجائے گا۔

الفتاوى الهندية (1/ 5):

"ولو كان عليه جلد سمك أو خبز ممضوغ قد جف فتوضأ ولم يصل الماء إلى ما تحته لم يجز؛ لأن التحرز عنه ممكن. كذا في المحيط". فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144012201971

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاشں

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے یہاں کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے

سوال پوچھیں

ہماری ایپلی کیشن ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے