بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

11 ربیع الثانی 1441ھ- 09 دسمبر 2019 ء

دارالافتاء

 

فرض کی آخری دو رکعتوں میں سورت ملانے سے نماز کا حکم


سوال

نماز میں اگر غلطی سے تیسری رکعت میں سورت ملا لیں تو اس کا کیا حکم ہے؟

جواب

اگر فرض کی تیسری یا چوتھی رکعت میں فاتحہ کے بعد سورت ملالی تو اس سے نماز پر فرق نہیں پڑتا ، سجدہ سہو کے بغیر نماز درست ہے، البتہ  سنت یہی ہے کہ سورت نہ ملائی جائے، لیکن اگر سورت ملادی جائے تب بھی سجدہ سہو واجب نہیں ہوتا۔ 

نماز کے مسائل کا انسائیکلو پیڈیا"   (دوسری جلد  صفحہ 432  و433) فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144012201635

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاشں

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے یہاں کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے

سوال پوچھیں

ہماری ایپلی کیشن ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے