بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

- 28 فروری 2020 ء

دارالافتاء

 

عورت کا سر ڈھکنا


سوال

عورت کے سرڈھکنے کا شریعت میں کیا حکم ہے؟

جواب

اجنبی مردوں (جن سے نکاح جائز ہے) سے عورت کا سر ڈھکنا فرض ہے۔

الموسوعة الفقهية الكويتية (24 / 174):
"اتفق الفقهاء على أن ستر العورة من الرجل والمرأة واجب عمن لايحل له النظر إليها. وما يجب ستره في الجملة بالنسبة للمرأة جميع جسدها عدا الوجه والكفين، وهذا بالنسبة للأجنبي".
 فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144106200344

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاشں

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے یہاں کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے

سوال پوچھیں

ہماری ایپلی کیشن ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے