بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

22 جمادى الاخرى 1441ھ- 17 فروری 2020 ء

دارالافتاء

 

صرف محمد نام رکھنا


سوال

 مجھے اللہ تعالیٰ نے 24 اکتوبر 2019 کو بیٹے سے نوازا ہے۔ میں نے اپنے بیٹے کا نام (محمد ) رکھاہے۔مجھے دوست رشتے دار کہتے ہیں کہ  آپ نام( محمد) کے ساتھ کوئی اور نام بھی لگائیں۔ جب کہ میں نےمنت مانگی تھی کہ اے اللہ پاک اگر آپ نے مجھے بیٹے سے نوازا تو میں اُس کا نام، آپ کے حبیب حضرت محمد ﷺکے نام کے صدقے (محمد)ہی رکھوں گا۔ آپ جناب سے گزارش ہے کہ میری راہ نمائی فرمائیں!

جواب

 آپ کو بیٹے کی پیدائش مبارک ہو! 

بچے کا نام ’’محمد‘‘ رکھنا درست ہے، اس کے ساتھ  دوسرا نام لگانا لازم نہیں۔

مزید تفصیل کے لیے درج ذیل لنک ملاحظہ کیجیے:

محمد نام رکھنے کا حکم اور اس کی فضیلت

 فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144103200561

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاشں

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے یہاں کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے

سوال پوچھیں

ہماری ایپلی کیشن ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے