بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

14 شعبان 1441ھ- 08 اپریل 2020 ء

دارالافتاء

 

زکوۃ رب المال پر ہوگی یا مضارب پر؟


سوال

ہم کاروبار کے لیے اپنی رقم کسی کو دیتے ہیں، تاکہ وہ اس رقم سے کاروبار کرے اور ہم منافع میں شریک ہوں، رقم کے مالک بھی ہم ہوتے ہیں، تو اس رقم پر زکاۃ ہم ادا کریں گے یا وہ ادا کریں گے جن کو یہ رقم دی گئی ہے؟

جواب

زکوۃ مال کے مالک کے ذمے ہوتی ہے، اس لیے مذکورہ صورت میں آپ ہی کاروبار میں لگی اپنی رقم کی زکوۃ ادا کریں گے۔


فتوی نمبر : 143708200017

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاشں

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے نیچے کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے۔

سوال پوچھیں

ہماری ایپلی کیشن ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے