بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

12 شعبان 1441ھ- 06 اپریل 2020 ء

دارالافتاء

 

جس مسجد میں پانچ وقت نماز نہ ہوتی ہو وہاں جمعہ پڑھانا


سوال

اگر ایک جامع مسجد میں پانچ وقت کی نماز باجماعت ادا نہیں کی جاتے،  کبھی دو کبھی تین نمازیں ادا کی جاتی ہیں، یعنی باقاعدگی سے باجماعت پانچ نمازیں ادا نہ ہوں تو اس مسجد میں نمازِ  جمعہ ادا کی جا سکتی ہے؟

جواب

بصورتِ مسئولہ جمعہ کے جواز کی شرائط میں سے مسجد میں پنج وقتہ نماز باجماعت ادا کرنا نہیں ہے، اس لیے اگر کسی مسجد میں  پانچ  وقت کی نماز باجماعت ادا  نہیں کی جاتی،   لیکن وہاں جمعہ کی  تمام شرائط پائی جاتی ہیں تو وہاں جمعہ قائم کرنا جائز ہے۔

وفي بدائع الصنائع للکاساني:

"وأما الشرائط التي ترجع إلى غير المصلي فخمسة في ظاهر الروايات، المصر الجامع، والسلطان، والخطبة، والجماعة[أي أداء الجمعة بالجماعة]، والوقت." (کتاب الصلاة، فصل بیان شرائط الجمعة، ج:۱،ص:۲۶۰،۲۵۹، ط:دار الکتب العلمیة) فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144105200597

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاشں

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے یہاں کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے

سوال پوچھیں

ہماری ایپلی کیشن ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے