بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

10 شعبان 1441ھ- 04 اپریل 2020 ء

دارالافتاء

 

بینک میں آفس بوائے کی ملازمت کا حکم


سوال

 میں ایک نجی ادارے میں آفس بوائےکا کام کرتا ہوں ،انہوں نے مجھے نیشنل بینک آف پاکستان کےہیڈآفس میں اپنے کنٹریکٹ پر رکھا ہوا ہے ، وہ نیشنل بینک آف پاکستان سے اپنا کمیشن لے کر بقایا ر قم ہمیں تنخواہ کی مد میں دیتے ہیں تو کیا یہ کام کرنا جائز ہے? برائے کرم راہ نمائی فرمائیں!

جواب

مذکورہ صورت میں آپ کی تنخواہ چوں کہ بینک کی طرف سے آتی ہے ؛ اس لیے یہ کام کرنا شرعاً جائز نہیں۔فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 143907200069

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاشں

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے یہاں کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔ سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے

سوال پوچھیں

ہماری ایپلی کیشن ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے