بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

12 شوال 1440ھ- 16 جون 2019 ء

دارالافتاء

 

بچے کی قے کا حکم


سوال

بچے کی الٹی پاک ہے یا ناپاک؟اگر ناپاک ہے تو اسکی حد کیا ہے؟اگر بچہ کپڑوں پر الٹی کردے تو کیا ان کپڑوں میں نماز ہوجائے گی؟

جواب

بچہ کی قے اگر منہ بھر کر ہو تو ناپاک ہے ، کپڑوں کو لگ جائے تو کپڑے بھی ناپاک ہوجاتے ہیں، اگر زیادہ مقدار میں یعنی کپڑے کے ایک چوتھائی یا زیادہ حصے پر پھیل جائے تو ایسے کپڑے کو پاک کئے بغیر نماز بھی نہ ہوگی، البتہ اگر اس سے کم ہو تو نماز ہو جائے گی۔واضح رہے کہ بچے کی وہ قے ناپاک ہے جو معدے کی طرف سے آئے اور منہ بھر کر ہو، اگر دودھ وغیرہ پینے یا کچھ کھانے کے بعد وہ منہ سے بہہ جائے تو وہ ناپاک نہیں، والله اعلم


فتوی نمبر : 143603200006

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن


تلاشں

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے یہاں کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے

سوال پوچھیں

ہماری ایپلی کیشن ڈاؤن لوڈ کرنے کے لئے