بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

21 شوال 1440ھ- 25 جون 2019 ء

دارالافتاء

 

کھڑے ہو کر میوے کھانا


سوال

میوہ کھڑے ہوکر کھانے کاکیاحکم ہے؟

جواب

کھڑے ہو کر کھاناپیناپسندیدہ نہیں،احادیث مبارکہ میں رسول اللہ ﷺسے ا س سے منع فرمایاہے،اور آپﷺ کا عام معمول بھی بیٹھ کر ہی کھانے پینے کا تھا۔البتہ عادت بنائے بغیر اگر کوئی شخص کبھی کبھار کھڑے ہوئے میوہ وغیرہ کوئی چیز کھالے تو یہ گناہ نہیں ۔(معارف الحدیث6/412-فتاوی محمودیہ 4/58)جن روایات یا عبارات میں اس کا ذکر ہے وہ بیانِ جواز کے لیے ہے۔ فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 143909201633

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن


تلاشں

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے یہاں کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے

سوال پوچھیں

ہماری ایپلی کیشن ڈاؤن لوڈ کرنے کے لئے