بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

15 شعبان 1440ھ- 21 اپریل 2019 ء

دارالافتاء

 

پندرہ شعبان کے روزے کا حکم


سوال

کیا شبِ براء ت کا روزہ اور نفلی نماز جائز ہے؟

جواب

واضح رہے کہ رسولِ اکرم صلی اللہ علیہ وسلم رمضان المبارک کے علاوہ ماہِ شعبان میں کثرت سے روزہ رکھنے کا اہتمام فرماتے تھے، اسی طرح اکابر کا معمول بھی پندرہ شعبان کا روزہ رکھنے کا رہاہے، لہذا اگر کوئی شخص پندرہ شعبان کا روزہ رکھنا چاہے تو رکھ سکتا ہے، اور اس رات نفلی عبادت کرنا بھی درست ہے، البتہ اس رات کے لیے کوئی مخصوص عبادت احادیث میں منقول نہیں، اسی طرح نوافل کی جماعت بھی درست نہیں ہے۔ فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 143908200082

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن


تلاشں

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے یہاں کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے

سوال پوچھیں