بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

- 27 مئی 2019 ء

دارالافتاء

 

نکاح سے پہلے خلع،استخارہ پر عمل لازمی ہے یا نہیں؟


سوال

لڑکی نکاح سے پہلے خلع لے سکتی ہے؟اور استخارے کے بعد کیا اس پر عمل کرنا لازمی ہے؟

جواب

خلع نکاح کے بعد ہوتا ہے،نکاح سے پہلےنہیں۔

استخارے کے بعد جس طرف دل کا میلان ہو وہی کام کرنا چاہیے، اسی میں اللہ تعالی نے خیر رکھی ہوتی ہے، تاہم استخارے کے مطابق عمل واجب نہیں ہوتا۔فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 143908200567

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن


تلاشں

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے یہاں کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے

سوال پوچھیں