بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

- 23 جولائی 2019 ء

دارالافتاء

 

موبائل سم کے ذریعہ ایڈوانس رقم لینا


سوال

کیا فرماتے ہیں مفتیان عظام اس مسئلے کے بارے میں کہ : موبائل میں ایڈوانس لینا ٹھیک ہے یا نہیں؟سود میں تو نہیں آتا؟

جواب

موبائل سم میں ایڈوانس بیلنس حاصل کرنے کی صورت میں کمپنی کچھ رقم اضافی لیتی ہے، اگریہ رقم سروس چارجز (خدمات کامعاوضہ)کی مد میں لی جاتی ہے یاپیشگی سروس دینے میں ٹیلی کام کمپنی نے اجرت زیادہ رکھی ہے تو شرعاً ایڈوانس لینا دینا جائز ہے۔فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 143902200033

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاشں

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے یہاں کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے

سوال پوچھیں

ہماری ایپلی کیشن ڈاؤن لوڈ کرنے کے لئے