بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

- 17 اکتوبر 2019 ء

دارالافتاء

 

معد نام رکھنا اور اس کا معنی


سوال

’’معد‘‘  نام رکھنا کیسا ہے؟ اس کا مطلب کیا ہے؟

جواب

’’مَعَدّ‘‘(میم اور عین کے زبر اور دال کی تشدید کے ساتھ ہے، اس ) کا معنی  ہے : مستعد ہونا اور تیار رہنا.  نبی کریم ﷺ کےاجداد میں ’’معد‘‘  بھی تھے، لہذا یہ نام رکھنا درست ہے.

شرح الزرقاني على المواهب اللدنية بالمنح المحمدية  (1 / 149) ط: دار الكتب العلمية:

"ابن معد" بفتح الميم والمهملة وشد الدال ابن الأنباري، يحتمل أنه مفعل من العد، أو من معد في الأرض إذا أفسد، وقيل غير ذلك. قال الفتح: وسمي معدًا، قال الخميس: لأنه كان صاحب حروب وغارات على بني إسرائيل ولم يحارب أحدًا إلا يرجع بالنصر والظفر".

معجم مقاييس اللغة لابن فارس - (4 / 32):

"وأمّا مَعدٌّ فقد ذكره ناسٌ في هذا الباب، كأنّهم يجعلون الميم زائدة، ويزنونه بِمَفْعَل، وليس هذا عندنا كذا، لأنَّ القياس لايوجبه، وهو عندنا فَعَلٌّ من الميم والعين والدال، وقد ذكرناه في موضعه من كتاب الميم". فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144012201392

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاشں

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے یہاں کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے

سوال پوچھیں

ہماری ایپلی کیشن ڈاؤن لوڈ کرنے کے لئے