بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

13 شوال 1440ھ- 17 جون 2019 ء

دارالافتاء

 

مردوں کے لیے مہندی لگانے کا حکم


سوال

مرد کے لیے مہندی کا کیا حکم ہے، آیا جائز ہے مکروہ ہے یا حرام ہے؟

جواب

مرد کے لیے سر اور داڑھی کے بالوں میں سیاہ رنگ کے علاوہ مہندی کا خضاب لگانا درست ہے۔

ہاتھوں اور پیروں پر مہندی لگانا عام حالات میں خواتین کے ساتھ خاص ہے، جب کہ مردوں کے لیے خواتین کی مشابہت اختیار کرنا اور ہاتھ پیر میں مہندی لگانا درست نہیں۔ البتہ مجبوری کی صورت میں (مثلاً بطورِ علاج) مرد کے لیے ہاتھ اور پاوٴں میں مہندی لگانے کی اجازت ہے۔ فقط واللہ تعالیٰ اعلم


فتوی نمبر : 144004200492

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن


تلاشں

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے یہاں کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے

سوال پوچھیں

ہماری ایپلی کیشن ڈاؤن لوڈ کرنے کے لئے