بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

- 18 ستمبر 2019 ء

دارالافتاء

 

فجر کی اذان میں ’’الصلاۃ خیر من النوم‘‘ بھول جائے


سوال

اگر موذن صبح کی اذان میں "الصلاة خیر من النوم "بھول جائے تو کیا اذان کا اعادہ کیا جائے گا؟

جواب

 فجر کی اذان میں "الصلاة خیر من النوم "کہنا مستحب ہے، چناں چہ اگر "الصلاة خیر من النوم "چھوٹ جائے تو اذان کو دوبارہ لوٹانے کی ضرورت نہیں۔فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 143908200736

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاشں

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے یہاں کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے

سوال پوچھیں

ہماری ایپلی کیشن ڈاؤن لوڈ کرنے کے لئے