بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

- 19 اکتوبر 2019 ء

دارالافتاء

 

عورت کے لیے نماز میں دونوں پاؤں ملا کر کھڑا ہونا


سوال

کیا عورت نماز پڑھنے کے لیے کھڑے ہونے کے وقت پیر کو ملاکے رکھے یا مرد کی طرح  تفریق بمقدار چار انگشت رکھے؟

جواب

عورت کے لیے  قیام ورکوع میں اپنے دونوں ٹخنوں کو ملانا بہتر ہے،  کیوں کہ یہ اس کے لیے زیادہ ستر کا باعث ہے۔ جب کہ مرد کو دونوں ٹخنوں کے درمیان معتدل فاصلہ رکھنا چاہیے۔فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144008200668

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاشں

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے یہاں کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے

سوال پوچھیں

ہماری ایپلی کیشن ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے