بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

- 23 جولائی 2019 ء

دارالافتاء

 

روزہ کی حالت میں اگربتی جلانا


سوال

روزے کی حالت میں اگربتی جلانا کیسا ہے؟ کیا روزہ مکروہ ہوجاتا ہے یا نہیں؟

جواب

روزہ کی حالت میں اگر بتی جلانا منع نہیں ہے، اس سے  اگر بتی  کی جو  خوشبو  خود بخود آجائے اس سے روزہ فاسد نہیں ہوتا، البتہ اگربتی جلا کر خود اس کےدھواں کو سونگھا، جس کی وجہ سے دھواں اندر چلے گیا تو  اس سے روزہ فاسد ہوجائے گا، لہذا احتیاط یہی ہے کہ روزہ کی حالت میں اگربتی نہ جلائی جائے۔

فتاوی شامی (2/ 395):

"ومفاده أنه لو أدخل حلقه الدخان أفطر أي دخان كان ولو عوداً أو عنبراً له ذاكراً لإمكان التحرز عنه، فليتنبه له كما بسطه الشرنبلالي.

(قوله: أنه لو أدخل حلقه الدخان) أي بأي صورة كان الإدخال، حتى لو تبخر ببخور وآواه إلى نفسه واشتمه ذاكراً لصومه أفطر؛ لإمكان التحرز عنه، وهذا مما يغفل عنه كثير من الناس".  فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144008201081

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاشں

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے یہاں کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے

سوال پوچھیں

ہماری ایپلی کیشن ڈاؤن لوڈ کرنے کے لئے