بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

20 ذو الحجة 1440ھ- 22 اگست 2019 ء

دارالافتاء

 

روح نکلنے سے پہلے گردن الگ ہوجائے تو قربانی کا حکم


سوال

روح نکلنے سے پہلے گردن الگ ہوجاۓ تو  کیا قربانی ہوجائے گی؟

جواب

قربانی ہو جائے گی اور گوشت بھی حلال ہوگا، البتہ  ذبح کرنے کا مذکورہ طریقہ مکروہ ہے، اس سے بچنا لازم ہے؛ اس لیے کہ اس میں جانور کو ضرورت سے زیادہ تکلیف دینا ہے۔

"وکره کل تعذیب بلا فائدةٍ مثل قطع الرأس والسلخ قبل أن تبرد أي تسکن عن الاضطراب". (الدر المختار / کتاب الذبائح ۹؍۴۲۷ ) فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 143909202193

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاشں

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے یہاں کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے

سوال پوچھیں

ہماری ایپلی کیشن ڈاؤن لوڈ کرنے کے لئے