بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

21 شوال 1440ھ- 25 جون 2019 ء

دارالافتاء

 

جمعہ کی سنتیں وقت سے پہلے ادا کرنا


سوال

سعودی عرب میں جمعہ کے دن جمعہ کی اذان کے فوراً بعد خطبہ شروع کردیا جاتا ہے، چار سنت رکعات کی ادائیگی کا وقت نہیں دیا جاتا تو اکثر افراد وقت سے پہلے سنت ادا کرتے ہیں۔ اور مکروہ وقت کا خیال بھی نہیں کیا جاتا۔مکروہ اوقات میں سنت یا نفل ادا کرنا کیسا ہے؟

جواب

 وقت سے پہلے یا  مکروہ  وقت میں نماز ادا کرنا درست نہیں،  البتہ اگر نماز سے پہلے سنت نہ پڑھ سکا تو  جمعہ کے بعد  ادا کرلے ۔ فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144004200322

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن


تلاشں

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے یہاں کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے

سوال پوچھیں

ہماری ایپلی کیشن ڈاؤن لوڈ کرنے کے لئے