بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

- 27 مئی 2019 ء

دارالافتاء

 

تین تولہ سونا اور ایک لاکھ روپے کی زکاۃ


سوال

میرے پاس تین تولہ سونا اور ایک لاکھ نقدی ہے، جسے تقریباً سال گزر چکا ہے، اس پر زکاۃ ہو گی؟ اور کتنی ادا کرنا ہو گی ، اس کا حساب کیسے لگائیں گے؟

جواب

جی ہاں آپ کے اوپر زکاۃ ادا کرنا لازم ہے جس کا حساب لگانے کا طریقہ یہ ہے کہ آپ تین تولہ سونے کی موجودہ  مارکیٹ ویلیو معلوم کریں، اس ویلیو اور ایک لاکھ کے مجموعہ کا ڈھائی فیصد نکال کر اس کو زکاۃ  کی مد میں دے دیں، زکاۃ کی رقم معلوم کرنے کا آسان طریقہ یہ ہے کہ مجموعہ مالیت کو چالیس سے تقسیم کردیں، حاصلِ جواب زکاۃ کی واجب الادا رقم ہوگی۔ فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 143909200502

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن


تلاشں

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے یہاں کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے

سوال پوچھیں