بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

19 ذو الحجة 1440ھ- 21 اگست 2019 ء

دارالافتاء

 

تبلیغی جماعت میں روانگی، واپسی اور گشت کے وقت کی جانے والی اجتماعی دعا کا حکم


سوال

تبلیغی جماعت میں نکل کرروانگی،واپسی، گشت کے وقت اجتماعی دعا کی جاتی ہے، اِس کی دلیل کیا ہے ؟

جواب

کسی بھی نیک عمل کے وقت دعا کرنا (چاہے انفرادی ہو یا اجتماعی) جائز ہے، بشرطیکہ اگر اس خاص موقع پر دعا کرنا ثابت نہ ہو تو اس وقت دعا کرنے کو دین کا جز اور لازم نہ سمجھا جائے، چنانچہ تبلیغی جماعت میں روانگی، واپسی اور گشت وغیرہ میں جاتے وقت اگر لازم سمجھے بغیر  (انفرادی یا اجتماعی) دعا کر لی جائے تو اس میں کوئی حرج نہیں ہے، البتہ اس کو لازم سمجھنا یا دین کا جز سمجھنا غلط ہوگا۔ فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144004201600

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاشں

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے یہاں کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے

سوال پوچھیں

ہماری ایپلی کیشن ڈاؤن لوڈ کرنے کے لئے