بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

- 19 ستمبر 2019 ء

دارالافتاء

 

تو نے فلاں کام کیا تو تجھے طلاق


سوال

زید نے 15 دن پہلے ٹیلی فون پر غصے کی حالت میں اپنی بیوی سے کہا: اگر تو نے فلاں کام کیا تو تجھے طلاق ہے، اور زید اس  وقت سعودیہ میں  ہے، اب زید کیا کرے؟

جواب

صورتِ مسئولہ میں اگر بیوی وہ کام کرے گی تو ایک طلاقِ رجعی واقع ہوجائے گی، لیکن عدت میں شوہر کو رجو ع کاحق ہوگا اور اس کے بعد شوہر کو دوطلاقوں کاحق ہوگا۔ایک طلاق سے بچنے کا طریقہ اب یہی ہے کہ بیوی وہ کام نہ کرے، لیکن اگر کرلیا تو چوں کہ شوہر عدت میں رجوع کرسکتا ہے؛ اس لیے نکاح برقرار رہے گا۔شوہر سعودیہ میں رہتے ہوئے بھی رجوع کرسکے گا جس کا طریقہ یہ ہوگا کہ شوہر دوگواہوں کی موجودگی میں کہہ دے  کہ میں نے اپنی بیوی سے رجوع کرلیا ہے یا اسے دوبارہ رکھ لیا ہے۔فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144004200185

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاشں

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے یہاں کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے

سوال پوچھیں

ہماری ایپلی کیشن ڈاؤن لوڈ کرنے کے لئے