بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

- 18 اگست 2018 ء

دارالافتاء

 

ایک جگہ سے متعدد بار تیمم کرنا


سوال

کیا  ایک ہی جگہ سے متعددبار تیمم کرسکتے ہیں ؟

 

جواب

ایک جگہ سے متعدد بار تیمم کرسکتے ہیں، اس میں کوئی حرج نہیں، تیمم کرنے والے کی ناپاکی مٹی کی طرف منتقل نہیں ہوتی۔فقط واللہ اعلم

 


فتوی نمبر : 143903200044


تلاشں

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے یہاں کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے

سوال پوچھیں