بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

- 25 مئی 2019 ء

دارالافتاء

 

ایزی پیسہ اکاؤنٹ میں پیسے جمع کرانے کی صورت میں ملنے والے منافع کا حکم


سوال

 ٹیلی نار سم کے اندر ایزی پیسہ اکاؤنٹ کھولا جاتا ہے تو اگر اس اکاؤنٹ میں 1000 RS. یا اس سے زیادہ رقم رکھ دی جاتی ہے تو اس پر 50 فری منٹ دیے جاتے ہیں، آیا وہ فری منٹ جائز ہیں یا نہیں ؟

جواب

صارف جو رقم ٹیلی نار ایزی پیسہ  اکاؤ نٹ میں جمع کرواتا ہے اس کی حیثیت قرض کی ہوتی ہے اور  چوں کہ قرض دے کر اس سے کسی بھی قسم کا نفع اٹھانا جائز نہیں ہے ؛ اس لیے اس قرض کے بدلے کمپنی کی طرف سے دی جانے والی سہولتیں (فری منٹ،انٹرنیٹ،میسج)سود ہیں اور  ان کا استعمال کرنا جائز نہیں۔فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 143909202269

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن


تلاشں

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے یہاں کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے

سوال پوچھیں