بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

17 ذو الحجة 1440ھ- 19 اگست 2019 ء

دارالافتاء

 

افطار کے لیے دی گئی رقم مسجد میں لگانا


سوال

 ایک شخص افطاری کے لیے خاص رقم دیتا ہے اورابھی رمضان کے روزے بھی باقی ہیں تو اس رقم سےبلا اجازت آدھا یا اس زیادہ مسجد کے فنڈ میں لگانا کیساہے؟

جواب

افطار کے لیے دی گئی رقم دینے والے کی اجازت و مرضی کے بغیر  افطار کے علاوہ کسی اور مصرف میں خرچ کرنا جائز نہیں۔فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 143909200287

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاشں

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے یہاں کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے

سوال پوچھیں

ہماری ایپلی کیشن ڈاؤن لوڈ کرنے کے لئے