بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيم

- 23 جولائی 2019 ء

دارالافتاء

 

ائمہ نام رکھنا


سوال

میری بیٹی کا نام ’’ائمہ‘‘  ہے، مہربانی فرما کر اس کے معنی بتائیں الف مد سے ہے۔

جواب

’’ائمہ‘‘  امام کی جمع ہے جس کے معنی قائد، رہبر امامِ نماز، حکم ران اور دیگر معانی آتے ہیں، یہ نام رکھنا مناسب نہیں۔خصوصاً لڑکی کا یہ نام رکھنا درست نہیں ہے۔  اس کے بجائے صحابیات رضی اللہ عنہن کے ناموں میں سے کوئی نام یا اچھے معنٰی والا عربی نام رکھ دیجیے۔ ہماری ویب سائٹ میں اسلامی ناموں کے سیکشن میں حروف تہجی کی ترتیب پر بچوں اور بچیوں کے منتخب نام موجود ہیں، حرف اور جنس منتخب کرکے نام پسند کرسکتے ہیں۔

 ائمة: إمام : (معجم الرائد) (اسم) 1- مصدر أم 2- من يقتدي به الناس 3- من يتقدم الناس في الصلاة 4- الخليفة 5- قائد الجند 6- القرآن (الـ)۔فقط واللہ اعلم


فتوی نمبر : 144010200151

دارالافتاء : جامعہ علوم اسلامیہ علامہ محمد یوسف بنوری ٹاؤن



تلاشں

کتب و ابواب

سوال پوچھیں

اگر آپ کا مطلوبہ سوال موجود نہیں تو اپنا سوال پوچھنے کے لیے یہاں کلک کریں، سوال بھیجنے کے بعد جواب کا انتظار کریں۔سوالات کی کثرت کی وجہ سے کبھی جواب دینے میں پندرہ بیس دن کا وقت بھی لگ جاتا ہے

سوال پوچھیں

ہماری ایپلی کیشن ڈاؤن لوڈ کرنے کے لئے